صحافی و کالم نگار شہزاد حسین بھٹی کے والد کی وفات پرتعزیت کا سلسلہ جاری

اسلام آباد /19 مارچ 2021
پاکستان فیڈریشن آف کالمسٹ کے سیکرٹر ی انفارمشن پنجاب،سینئر صحافی وکالم نگار شہزادحسین بھٹی کے والد مشتاق حسین اٹک شہر میں انتقال کر گئے۔ مشتاق حسین بھٹی سابق ہیڈماسٹر اختر حسین بھٹی،پروفیسر ریاض حسین بھٹی، عطرت حسنین بھٹی کے بھائی،میجرلورز فورس کے چیف پیٹرن و سٹی ہیڈ میجر گروپ محمد اکرم خان کے برادرنسبتی،سابق ڈی ای او سکینڈری راجہ مختار احمد کے کنزن، پروفیسر اعتراز عزیز،پروفیسر احتشام عزیز کے ماموں،صدر اعوان اتحاد پنجاب ملک شاہد اقبال کے پھوپھا تھے۔مشتاق حسین بھٹی کی نماز جنازہ اسی شام ساڑے پانچ بجے مرکزی عید گاہ اٹک شہر میں ادا جبکہ تدفین نئے قبرستان میں کی گئی۔ تعزیت و فاتحہ خوانی کے لیے آنے والوں کا سلسلہ بھٹی ہاؤس آر بلاک اٹک شہر میں تاحال جاری ہے۔

صحافی و کالم نگار شہزاد حسین بھٹی کے والد کی وفات پرتعزیت کا سلسلہ جاری
مشتاق حسین بھٹی مرحوم

تعزیت کے لئے آنے والوں میں ایم این اے میجر (ر) طاہر صادق، ترجمان حکومت پنجاب و ضلعی صدر پی ٹی آئی قاضی احمد اکبر، ایوان مہر علی شاہ اٹک حضرو کے سرپرست اعلیٰ محمد صالح چشتی گولڑوی،سابق چیرمین بلدیہ اٹک شیخ ناصر محمود، وائس چیرمین ملک طاہر اعوان، سابق ناظم ملک حامد صفدر،ڈسڑکٹ انفارمشن آفیسر شہزاد نیاز،سابق پرنسپل گورنمنٹ پائیلٹ سیکنڈری سکول اٹک شیخ آصف صدیقی،ماہر تعلیم ذولفقار احمد، پاکستان فیڈریشن آف کالمسٹ کے مرکزی صدر ملک محمد سلیمان،ایس ڈی او پی ٹی سی ایل فیاض احمد،پروفیسر نصرت بخاری، پروفیسر اظہر محمود، پروفیسر ڈاکٹر ارشد محمود ناشاد،پیر سیدفداء حسین شاہ شیرازی، علامہ رفاقت حقانی،فوکل پرسن پاکستان جسٹس اینڈ ڈیموکریٹک پارٹی ایڈوکیٹ سپریم کورٹ شیخ احسن الدین،، ایڈوکیٹ شفیق الرحمن خٹک،ایڈوکیٹ ملک محمد عثمان، ایڈوکیٹ ملک محمد صادق(میانوالی)، صحافی و کالم نگار اقبال زرقاش، صحافی جاوید کشمیری، صحافی محمد صابرین، صحافی حافظ عبدالحمید، صحافی مسعود ماجد سید، صحافی ملک ارشد جعفری، صحافی و کالم نگار جاوید ملک،پاکستان فیڈریشن آف کالمسٹ کے ضلعی صدر ملک محمد ممریز،پنجا بی ادبی تنظیم دل دریا پاکستان کے سرپرست اعلیٰ احمد گجراتی جبکہ ادیبوں میں نقاد ارشاد علی، سجاد سرمد، طاہر اسیر، گوہر رحمن گوہر(مردان)،نزاکت علی نازک،سید حبدار قائم کے علاوہ عمائدین شہر کی کثیر تعداد نے شرکت کی۔

حبدار قائم

میرا تعلق پنڈیگھیب کے ایک نواحی گاوں غریبوال سے ہے میں نے اپنا ادبی سفر 1985 سے شروع کیا تھا جو عسکری فرائض کی وجہ سے ١1989 میں رک گیا جو 2015 میں دوبارہ شروع کیا ہے جس میں نعت نظم سلام اور غزل لکھ رہا ہوں نثر میں میری دو اردو کتابیں جبکہ ایک پنجابی کتاب اشاعت آشنا ہو چکی ہے

Next Post

اس شہر میں تم جیسے دیوانے ہزاروں ہیں

ہفتہ مارچ 20 , 2021
کیا امراو جان اداء ایک حقیقی کردار تھا یا مرزا ھادی رسواء کی ذہنی تخلیق
Umrao Jaan Ada