میلاد مولا علیؑ کرم اللہ وجہہ

میلاد مولا علی کرم اللہ وجہہ کے سلسلے میں اہلسنت کی عظیم قدیمی درسگاہ جامعہ قادریہ حقانیہ ، محلہ امین آباد، اٹک شہر  کی جامع مسجد نوری پیر بادشاہ صاحبؒ کی بزم نوریہ کے زیر اہتمام ایک باوقار، پرنُور،روحانی اور عرفانی محفل کا انعقاد کیا گیا۔

اس بابرکت محفل کا آغاز تلاوت کلام پاک سے ہوا جس کی سعادت حافظ فرحان مدثر صاحب نے حاصل کی ، احمد امین قادری صاحب اور حافظ القاری طاہر ملک صاحب نعت رسول خدا صلی اللہ علیہ وآلہ وسلم  پیش کرنے کی سعادت سے بہرہ مند ہوئے۔

جامعہ کے نگران اعلی واعظ شیریں بیاں استاذ الاساتذہ حضرت مولانا علامہ محمد یوسف حقانی مدظلہ العالی صاحب  نے اپنے وعظ حسنہ سے حاضرین کے اذہان و قلوب کو  سیرت مولا علی کرم اللہ وجہہ کی نورانیت  کے بیان سے منور کیا۔انہوں نے کہا کہ جناب رسول خدا ﷺنے فرمایا  ” علی مع القرآن و قرآن مع علی” ، یعنی  علیؑ قرآن کیساتھ ہیں اور قرآن علی کے ساتھ ہے ، پس ثابت ہوا کہ جو قرآن  کو مانتا ہے اُسے مولا علی کرم اللہ وجہہ کو ماننا ہی پڑے گا  وگرنہ بیکار  اس کی حیات ۔

جناب قاری طاہر صاحب اور قاسم قادری صاحب نے ہدیہ سلام پیش کیا اور آخر میں  سرمایہ اہلسنت  واعظ شیریں بیاں استاذ الاساتذہ حضرت مولانا علامہ محمد یوسف حقانی مدظلہ العالی صاحب نے  خصوصی دعا فرمائی جس میں ملک پاکستان کی ترقی ،حفاظت اور دوام ،تمام عالم اسلام بالخصوص کشمیر و فلسطین کے مسلمانوں  کی غیبی امداد و نصرت بارگاہ الہی  سے انتہائی عاجزی اور رقت کے ساتھ طلب کی گئی۔

سرمایہ اہلسنت  واعظ شیریں بیاں استاذ الاساتذہ حضرت مولانا علامہ محمد یوسف حقانی مدظلہ العالی 

تصاویر : حقانی میڈیا

روبالہ تخلیق

Next Post

جیسا میرا دیس ہے افسر

ہفتہ فروری 27 , 2021
جب اٹک کی سیر و سیاحت کا ذکر ہوتا ہے تو اسکی تاریخی اہمیت کو بھی نظر انداز نہیں کیا جا سکتا
iattock