مصاحبہ

مصاحبہ
۔۔۔۔۔
ڈاکٹر خالد اسراں سے
انٹرویو کنندہ: مقبول ذکی مقبول، بھکر
ڈاکٹر خالد اسراں (ڈاکٹرسرجن خالد جاوید) بھکر کے رہائشی ہیں۔قد درمیانہ،گندمی رنگت ،خوش شکل،خوش گفتار اور مہمان نواز ہیں۔ صاحب ثروت بھی ہیں۔


غریبوں کے ہمدرد ہیں۔ عرصہ دراز سے دکھی انسانیت کی خدمت کر رہے ہیں۔چند سال سے ٹی ایچ کیو ہسپتال منکیرہ میں ایم ایس کے فرائض سر انجام دے رہے ہیں۔
ایک اچھا انسان ہونے کے ناتے لوگ ان سے بے حد محبت کرتے ہیں۔ ان کا ظاہر و باطن ایک ہی ہے۔ اس کی وجہ یہ ہے کہ ایک اچھے شاعر و ادیب ہیں۔ ایک اچھے شاعر و ادیب میں یہ خوبیوں کا ہونا بھی ضروری ہے۔

khalid asran


چند اشعار ملاحظہ فرمائیں۔
۔۔۔۔۔
بے ہنگم رقص ہے اب بھوک کا ہر سو
اٹھو لوگو! بغاوت کی ضرورت ہے
۔۔۔۔۔
سب لوگ گزر جاتے ہیں سنتا نہیں کوئی
اک بھیڑ ہے جس میں کوئی لاچار گری ہے
۔۔۔۔۔
جو جنگ چھڑ گئی ہے وہ کون جیتا ہے
یہ فیصلہ تو میری ماں کی دعا کرے گی
۔۔۔۔۔
نیکیوں کا یہاں کب صلہ ہوتا ہے
خواب جنت کا بس اک ملا ہوتا ہے
۔۔۔۔۔
شاہ معتبر تھا یہاں بے لباس ہو کر بھی
غریب کپڑوں میں ملبوس بے حیا ٹھہرے
۔۔۔۔۔

khalid and zaki

گزشتہ دنوں ان سے ملاقات کرنے کا شرف حاصل ہوا ہے۔جو گفتگو ہوئی وہ نذر قارئین ہے۔
س : آپ کا نام۔۔۔۔۔؟
ج : خالد جاوید
س : تخلص۔۔۔۔۔؟
ج : خالد
س : آپ نے ادبی زندگی کا آغاز کب کیا۔۔۔۔۔؟
ج : 1999ء
س : استاد شاعری۔۔۔۔۔؟
ج : ناصر ملک، استاد نزیر ڈھالہ خیلوی
س : مقام و تاریخ پیدائش۔۔۔۔۔؟
ج : 05/02/1977 ڈیرہ اسماعیل خان
س : آپ کا طبعی میلان نظم کی طرف زیادہ ہے یانثر کی طرف۔۔۔۔۔؟
ج : نثر کی طرف افسانہ کی طرف
س: ذوق مطالعہ۔۔۔۔۔؟
ج : تاریخ، فلسفہ، ادب، میں مبارک علی (تاریخ)
فلسفہ (کارل مارکس،(یسن ووہس) ادب، منٹو، کرشن چندر
س : پسندیدہ اصناف شعر۔۔۔۔۔؟
ج : غزل
س : آپ کی تخلیقات۔۔۔۔۔؟
ج : آبلہ پا خواب، درزندان، سربریدہ سائے،(افسانے)
شہر افلاس (شاعری)
س : آپ کا شاعری میدان۔۔۔۔۔؟
ج : انقلاب شاعری
س : اعزازات۔۔۔۔۔؟
ج : چند شیلڈز اسناد
س : آپ کی کسی ادبی تنظیم سے وابستگی۔۔۔۔۔؟
ج : بزم فکر و دانش، چوک اعظم
بزم لطیف
س : آپ ایک آزاد نظم سنانا پسند کریں گے۔۔۔۔۔؟
ج : جی ضرور

دام
۔۔۔۔۔
زخم دیکھ کر
دکھ ماپ کر مسیحا نے کہا
زخم ہو یا دکھ
مسیحائی خریدی جاتی ہے
دکھ بول پڑا
اے مسیحا!
میرے ساتھ نہ کھیلو
کہ یہ کھیل
باعثِ رسوائی ہے
مسیحا ہنس دیا
اس کھنکتی ہوئی ہنسی نے
ایک لمحے میں
سمجھا دیا کہ
زمانہ بدل چکا ہے
مسیحا بدل چکے ہیں
مسیحائی بکتی ہے
اور خریدی جاتی ہے
۔۔۔۔۔

س : ادب کے حوالے سے آپ کی رائے۔۔۔۔۔؟
ج : موجودہ ادب میں پرانے رجحانات کے بجائے نئے رجحانات کی ضرورت ہے۔ معاشرے کے مسائل غریب ناانصافی پر لکھا جائے

maqbool zaki

مقبول ذکی مقبول

بھکر

مقبول ذکی مقبول

Next Post

اعلیٰ صحافتی اقدار کے امین،ارشاد احمد حقانی

اتوار جنوری 23 , 2022
صحافی، کالم نویس اور دانشور ارشاد حقانی6 ستمبر 1928ء کو قصور میں پیدا ہوئے۔ارشاد احمد حقانی علم وادب کا ذخیرہ ہونے کے ساتھ ساتھ ایک بے باک اور نڈر صحافی تھے ۔
Irshad Ahmad Haqqani