72دلچسپ حقائق والا پاکستان

پاکستان، سرکاری طور پر اسلامی جمہوریہ پاکستان، دنیا کا چھٹا سب سے زیادہ آبادی والا ملک ہے۔ اس کا رقبہ 796,095 مربع کلومیٹر ہے۔ پاکستان سیاحوں کے لیے سرفہرست مقامات میں سے ایک ہے۔ یہ ملک قدرت کی عطا کردہ خوبصورتی سے مالا مال ہے جس میں اونچے پہاڑ، خوبصورت وادیاں، دریا اور سرسبز و شاداب میدان ہیں۔ سوات، زیارت، کاغان اور اسکردو وغیرہ جیسے مقامات کو دنیا کے بہترین سیاحتی مقامات میں شمار کیا جاتا ہے۔ میں نے پاکستان کے بارے میں 72 دلچسپ حقائق اکٹھے کیے ہیں جو یقیناً دلچسپی کا باعث ہونگے۔

1۔ پاکستان میں واقع سیالکوٹ دنیا کا سب سے بڑا فٹ بال تیار کرنے والا شہر ہے۔ خطے میں مقامی فیکٹریاں سالانہ 40-60 ملین فٹ بال تیار کرتی ہیں، جو کہ دنیا کی کل پیداوار کا تقریباً 50-70% ہے۔ فٹ بال مینوفیکچرنگ انڈسٹری اب 200 سے زائد فیکٹریوں پر مشتمل ہے۔

SialkotFottball

Images Courtesy : Wikipeida

2۔ پاکستان ایٹمی طاقت حاصل کرنے والا دنیا کا پہلا اسلامی ملک ہے۔

3۔ دنیا کی بلند ترین پختہ سڑک شاہراہ ریشم جسے قرارم ہائی وے بھی کہا جاتا ہے پاکستان میں واقع ہے۔ شاہراہ قراقرم انتہائی مشکل پہاڑی علاقے میں بنائی گئی ہے اس لیے اسے دنیا کا آٹھواں عجوبہ بھی کہتے ہیں۔

By Hunzagrapher - Own work, CC BY-SA 4.0, https://commons.wikimedia.org/w/index.php?curid=110384742
By Hunzagrapher – Own work, CC BY-SA 4.0,

4۔ پاکستان میں دنیا کا سب سے بڑا نہری نظام آبپاشی ہے۔

5۔ پاکستان میں دنیا کا سب سے بڑا نجی  ایمبولینس نیٹ ورک ہے۔ پاکستان کی ایدھی فاؤنڈیشن، جس کا نام گنیز بک آف ورلڈ ریکارڈ میں بھی درج ہے، اس نیٹ ورک کو چلاتی ہے۔ اس نیٹ ورک میں ائیر ایمبولینس بھی شامل ہیں۔

6۔ کرکٹ کے کھیل میں اپنے پہلے ٹیسٹ میچوں میں کھیلنے والے دو کھلاڑیوں کی سب سے زیادہ بیٹنگ پارٹنر شپ کراچی میں آسٹریلیا کے خلاف پاکستان کے لیے خالد عباد اللہ (پیدائش 20 دسمبر 1935) اور عبدالقادر (پیدائش 1944، وفات 2002) کی 249 رنز ہے۔ یہ میچ  24-29 اکتوبر 1964 کو کھیلے گئے تھے ۔سابق پاکستانی فاسٹ باؤلر وسیم اکرم ٹیسٹ اور ون ڈے دونوں میں 400 وکٹیں لینے والے پہلے کھلاڑی ہیں (دوسرے نمبر پر متھیا مرلی دھرن ہیں)۔

7۔ اگست 2017 میں پاکستان کی تخمینہ آبادی 207,774,520 تھی، جس کے مطابق پاکستان  دنیا کا چھٹا سب سے زیادہ آبادی والا ملک ہے۔

8۔ نام پاکستان کا مطلب فارسی اور اردو میں ‘پاکوں کی سرزمین’ ہے۔

9۔ پاکستان سے صرف دو افراد نے نوبل انعام جیتا ہے۔ 2014 میں ملالہ یوسفزئی برائے امن اور 1979 میں فزکس کے لیے ڈاکٹر عبدالسلام۔

10۔ پاکستان دنیا کی پہلی بلند ترین اے ٹی ایم (آٹو میٹ ٹیلر مشین) کی تنصیب  پر نازاں ہے۔ یہ اے ٹی ایم کو نیشنل بینک آف پاکستان کی ملکیت ہے اور یہ پاک چین سرحد، درہ خنجراب پر سطح سمندر سے 16,007 فٹ کی بلندی پر نصب ہے۔

11۔ کراچی، پاکستان کا سب سے بڑا شہر، اس کا مالیاتی مرکز ہونے کے ساتھ ساتھ تقریباً 17 ملین افراد کا گھر ہے۔ اس میں ایک بڑی بندرگاہ بھی ہے۔ کراچی آزادی کے بعد پاکستان کا پہلا دارالحکومت تھا اور 1958 میں دارالحکومت اسلام آباد منتقل ہونے تک ملک کا دارالحکومت رہا۔

12۔ پاکستان 14 اگست 1947 کو جب آزاد ہوا تو اسلامی تقویم کے مطابق رمضان المبارک کا مہینہ تھا اور ستائیسویں شب تھی۔

13۔ ملکہ الزبتھ دوم 1956 تک پاکستان کی ملکہ رہیں۔ اور سابق امریکی صدر براک اوباما نے 1981 میں پاکستان کا دورہ کیا۔ اس وقت وہ کالج مین پڑھتے تھے۔

By Official White House Photo by Pete Souza - P120612PS-0463 (direct link)https://web.archive.org/web/20160227060205/https://www.whitehouse.gov/administration/president-obama (Official White House page - direct link), Public Domain, https://commons.wikimedia.org/w/index.php?curid=23956389
By Official White House Photo Public Domain, Link

14۔ گنے کا رس پاکستان کا قومی مشروب ہے۔ پاکستان میں اسے “روہ” کے نام سے بھی جانا جاتا ہے۔

15۔ پاکستان انٹرنیشنل ایئر لائنز (پی آئی اے) کی بنیاد 23 اکتوبر 1946 کو اورینٹ ایئر ویز کے طور پر رکھی گئی۔ اس ایئر لائن کو 10 جنوری 1955 کو قومیایا گیا تھا۔ اس ایئر لائن کے پاس لندن اور کراچی کے درمیان تیز ترین پرواز کرنے کا عالمی ریکارڈ ہے۔ ایئرلائن نے یہ کارنامہ 1962 میں اس وقت سرانجام دیا جب انہوں نے 6 گھنٹے 43 منٹ، 55 سیکنڈ میں پرواز مکمل کی، یہ ریکارڈ آج تک قائم ہے۔

16۔  کے ٹو (چگوری) پاکستان کی سب سے اونچی اور دنیا کی دوسری بلند ترین چوٹی ہے۔

17۔ پاکستان میں تاریخ کی قدیم ترین تہذیبوں میں سے ایک تہذیب  مہر گڑھ بھی ہے جو کہ 6000 سال  قبل مسیح کی تہذیب  ہے۔ مہر گڑھ کو اب وادی سندھ کی تہذیبوں کی پیش رو سمجھا جاتا ہے۔ یہ علاقہ  جنوبی ایشیا میں کھیتی باڑی اور گلہ بانی کے آثار کے ساتھ قدیم ترین مقامات میں سے ایک ہے۔

18۔ پاکستان میں دریائے سندھ کے پانی میں نایاب نسل کی ’اندھی ڈولفن‘ بھی پائی جاتی ہے۔یہ دنیا کی دوسری سب سے زیادہ خطرے سے دوچار میٹھے پانی کی ڈولفن کی نسل ہے، پہلی دریائے یانگسی کی ڈولفن ہے۔

19۔ پاکستان نے دنیا کے کم عمر ترین سول جج کے اعزاز کے ساتھ بھی تاریخ رقم کی۔ محمد الیاس نے 20 سال 9 ماہ کی عمر میں امتحان پاس کیا اور اس طرح وہ دنیا کے سب سے کم عمر سول جج بن گئے۔

20۔ پاکستان میں ’کھیوڑہ سالٹ مائن‘ دنیا کی دوسری بڑی اور قدیم ترین نمک کی کان ہے۔

21۔ پاکستان کے پاس دنیا کا واحد زرخیز صحرا ہے  صحرائے تھرپارکر جو  صوبہ سندھ میں واقع ہے۔

22۔ پاکستان کے پاس دنیا کی گیارہویں بڑی مسلح قوت ہے۔ اس کی فوج میں 617,000 افراد ہیں۔ اقوام متحدہ کے امن مشن کو بڑی حد تک پاکستانی فوج کی مدد حاصل ہے۔

23۔ ایک سروے کے مطابق پاکستان کا قومی ترانہ دنیا کے سرفہرست قومی ترانوں میں سے ایک ہے۔ پاکستان کے قومی ترانے کا دورانیہ 80 سیکنڈ ہے۔

24۔ انسٹیٹیوٹ آف یورپین بزنس ایڈمنسٹریشن کے 125 ممالک سے اکٹھے کیے گئے سروے کے نتائج کے مطابق پاکستانی دنیا کے ذہین ترین افراد میں چوتھے نمبر پر ہیں۔

25۔ سائنسدانوں اور انجینئروں کا دنیا کا ساتواں بڑا گروہ پاکستان سے ہے۔

26۔ قطبی خطوں کے علاوہ  دنیا کا سب سے طویل برفانی نظام – بیافو گلیشیر – پاکستان میں ہے۔

27۔ دنیا کا سب سے بڑا مٹی کا ڈیم (اور ساختی حجم کے لحاظ سے پانچواں بڑا) پاکستان میں دریائے سندھ پر ’تربیلا ڈیم‘ ہے۔ یہ ڈیم 1968 اور 1976 میں بنایا گیا تھا۔ یہ ڈیم 143.26 میٹر اونچا اور 2,743.2 میٹر لمبا ہے۔

28۔ پاکستان کے کل رقبے میں سے 25% رقبہ زرعی زیر کاشت ہے۔ پاکستان روس کے مقابلے تین گنا زیادہ اراضی کو سیراب کرتا ہے۔

29۔ دنیا کا سب سے بڑا مصنوعی (انسان ساختہ) جنگل پاکستان میں ہے – چھانگا مانگا جنگل (رقبہ 12,423 ایکڑ)۔ اس کا نام دو ڈاکو بھائیوں کے نام پر رکھا گیا ہے، چھانگا مانگا کا جنگل اصل میں 1866 میں برطانوی جنگلات والوں نے لگایا تھا۔

30. پاکستانی مایہ ناز اسکواش کھلاڑی جہانگیر خان جنہوں نے  1981 اور 1986 کے درمیان، لگاتار 555 میچ جیتے (گنیز ورلڈ ریکارڈ کے درج کردہ اعلیٰ سطح کے پیشہ ورانہ کھیلوں میں کسی بھی کھلاڑی کی جیت کا سب سے طویل سلسلہ)۔

31۔ پاکستان کا دارالحکومت اسلام آباد، دنیا کا دوسرا خوبصورت ترین دارالحکومت ہے۔

32۔ پاکستان میں مسافر ٹرینوں کے لیے دو پٹڑیوں کے درمیان، 5 فٹ 6 انچ کا فاصلہ ہوتا ہے، یہ دنیا میں مسافر ٹرینوں کی پٹڑیوں کے مابین زیر استعمال سب سے وسیع گیج ہے۔

33۔ پاکستان کے پاس دنیا کے بہترین تربیت یافتہ فضائیہ کے پائلٹ ہیں۔

34۔ پاکستان کے ائیر کموڈور مرحوم ایم ایم عالم کو یہ اعزاز حاصل ہے کہ انہوں نے 1965 کی پاک بھارت جنگ کے دوران ایک منٹ سے بھی کم وقت میں پانچ طیارے مار گرائے تھے۔

35۔ اسلام آباد ملک کی آزادی کے ٹھیک 20 سال بعد 14 اگست 1967 کو باضابطہ طور پر پاکستان کا دارالحکومت بنا۔

36۔ پاکستان دنیا کا واحد ملک ہے جو دو قومی نظریے کی بنیاد پر قائم ہوا۔

37۔ ترکی کے بعد پاکستان واحد مسلم ملک ہے جس نے خواتین کے لیے عسکری نوکریاں کھولی ہیں۔

38۔ دنیا کا بلند ترین پولو گراؤنڈ پاکستان میں ہے۔ شندور پاس ضلع چترال شمالی پاکستان میں واقع ہے جو 3,700 میٹر پر دنیا کا بلند ترین پولو گراؤنڈ ہے۔ 1936 سے شندور ٹاپ پر روایتی پولو فیسٹیول کا انعقاد کیا جا رہا ہے۔

39۔ پاکستان انڈونیشیا کے بعد دنیا کی دوسری سب سے بڑی مسلم آبادی والا ملک ہے۔

40۔  8 اکتوبر 2005 کو پاکستان کے کشمیر کے علاقے میں ریکٹر اسکیل پر 7.6 کی شدت کا زلزلہ آیا۔ زلزلے سے تقریباً 30 لاکھ افراد بے گھر ہو ئے، جو زلزلے سے بے گھر ہونے والی سب سے زیادہ تعداد ہے۔

41۔ فری لانسنگ انٹرنیٹ کے ذریعے تکنیکی مہارت فراہم کرنے کا ایک طریقہ کار ہے۔ جس میں  پاکستان بھارت، بنگلہ دیش اور امریکہ کے بعد دنیا میں  چوتھے نمبر پر ہے۔

42۔ پاکستان کی سرحدیں 17 اگست 1947 کو ہندوستان اور پاکستان کی علیحدگی کے دو دن بعد کھینچی گئیں۔

43۔ گوادر بندرگاہ دنیا کی سب سے بڑی گہرے سمندر کی بندرگاہ ہے، جو بلوچستان، پاکستان کی ساحلی پٹی کے ساتھ جنوب مغربی بحیرہ عرب پر واقع ہے۔ بندرگاہ کا رقبہ 64,000 مربع میٹر ہے اور اس کی گہرائی 14 میٹر سے زیادہ ہے۔

44۔ 1965 میں کشمیر پر پاکستان کی بھارت کے ساتھ دوسری جنگ ہوئی۔ سترہ روزہ جنگ میں دونوں طرف ہزاروں ہلاکتیں ہوئیں، اور دوسری جنگ عظیم کے بعد ٹینکوں کی سب سے بڑی لڑائی بھی اسی جنگ میں دیکھی گئی۔

45۔ بے نظیر بھٹو پاکستان کی اور کسی بھی مسلم قوم کی پہلی خاتون وزیر اعظم بنیں۔

46۔ پاکستان میں اپنی نوعیت کی  ایک منفرد جھیل ہے – آنسو جھیل ،جھیل کی شکل ایک آنسو کی طرح ہے۔ یہ جھیل ایک بھنوؤں والی انسانی آنکھ کی طرح بھی نظر آتی ہے جو گرمیوں کے دنوں میں برف پگھلنے پر نمایاں ہو جاتی ہے۔ جھیل کے مرکز میں ایک جزیرہ ہے جو آنکھ کی پتلی سے ملتا جلتا ہے۔

46۔ پاکستان میں دنیا کی سب سے بڑی واحد گنبد والی مسجد بھی ہے – مسجد طوبی۔ یہ مسجد کراچی، سندھ، پاکستان میں واقع ہے اور مقامی طور پر گول مسجد کے نام سے مشہور ہے۔ مسجد کے گنبد کا قطر 212 فٹ ہے اور اس کی اونچائی 51.48 فٹ ہے۔ یہ گنبد ایک پست گھومتی دیوار پر متوازن ہے جس میں مرکزی ستون نہیں ہیں۔ اسے 1969 میں تعمیر گیا تھا۔

47۔ وادی کاغان کے شمالی سرے پر واقع جھیل سیف الملوک پاکستان کی بلند ترین جھیلوں میں سے ایک ہے جو سطح سمندر سے 3,224 میٹر (10,578 فٹ) کی بلندی پر ہے۔

48۔ پچھلے پانچ سالوں میں پاکستان کی شرح خواندگی میں 250 فیصد اضافہ ہوا ہے جو کہ کسی بھی ملک میں اب تک کا سب سے بڑا اضافہ ہے۔

49۔ موہنجو دڑو پاکستان کے صوبہ سندھ میں آثار قدیمہ کا ایک  مقام ہے۔ یہ اپنے وقت کے دوران دنیا کے سب سے بڑے اور جدید ترین شہروں میں سے ایک تھا (تقریباً 2500 قبل مسیح میں بسایا گیا تھا)۔

50۔ پاکستان کے 6 ثقافتی تاریخی مقامات عالمی ثقافتی ورثے کی فہرست میں شامل ہیں۔

  1. موئن جودڑو میں آثار قدیمہ کے کھنڈرات (1980)
  2. تخت بائی کے بدھ مت کے کھنڈرات اور قریبی شہر سری بہلول کے باقیات (1980)
  3. لاہور میں قلعہ اور شالامار باغات (1981)
  4. مکلی، ٹھٹھہ میں تاریخی یادگاریں (1981)
  5. روہتاس قلعہ (1997)
  6. ٹیکسلا (1980)
Takht Bhai taxila
Shalimar Makli
Rohtas Mohin jo Doro

Images Courtesy : Wikipeida

51۔ پاکستان کے شہر ٹھٹھہ میں واقع مکلی کے قبرستان میں نصف ملین سے زیادہ مقبرے اور قبریں ہیں۔ یہ دنیا کے سب سے بڑے قبرستانوں میں سے ایک ہے۔ یہ مقبرے 14ویں اور 18ویں صدی کے درمیان 400 سال کے عرصے میں بنائے گئے تھے۔

52۔ گڈانی، پاکستان میں دنیا کا تیسرا سب سے بڑا شپ بریکنگ یارڈ بھی ہے۔

53۔ لاہور، پاکستان کی بادشاہی مسجد دنیا کی بڑی مساجد میں سے ایک ہے۔ اسے مغل بادشاہ اورنگزیب نے 1671 میں بنایا تھا اور اس کی تعمیر 1673 میں مکمل ہوئی تھی۔

54۔ گوادر پاکستان کے صوبہ بلوچستان میں گہرے سمندر میں گرم پانی کی سب سے بڑی بندرگاہ ہے۔ اسے جنوبی ایشیا کی ایک اقتصادی راہداری سمجھا جاتا ہے جو آنے والے سالوں میں پاکستان کے لیے ترقی کے بہت سے مواقع پیدا کرے گی۔۔

55۔ سہیل عباس، ایک پاکستانی فیلڈ ہاکی ڈیفنڈر، فیلڈ ہاکی کی تاریخ میں سب سے زیادہ گول کرنے والے کھلاڑی ہیں، ان کے موجودہ گول کی تعداد 348 ہے۔

56۔ پاکستان اپنے ٹرک آرٹ (پیچیدہ پھولوں کے نمونوں اور شاعرانہ خطاطی کے ساتھ ٹرکوں کو سجانے کا فن) کے لیے بھی مشہور ہے۔ ٹرکوں کو چمکیلے رنگوں  سے رنگ کیا جاتا ہے ، جن پر دلکش بیل بوٹے اور تصاویر بنائی جاتی ہیں ان فنکاروں کی تخلیقی صلاحیت بہت کمال کی ہے۔

57۔ جب پاکستان آزاد ہوا تو یہاں ہندوستان کے مختلف حصوں سے 10 سے 12 ملین کے درمیان مہاجرین آئے۔ ان میں سے بہت سے لوگوں نے اپنا سب کچھ کھو دیا تھا ۔ سب لوگوں کو اپنی سرزمین پر خوش آمدید کہا اور انہیں خوشحال زندگی گزارنے میں مدد کی۔

58۔ سلویسٹر اسٹالون کی مشہور زمانہ فلم ریمبو تھری کی شوٹنگ پاکستان میں ہوئی۔

59۔ پاکستانی انٹیلی جنس کو دنیا کی بہترین انٹیلی جنس کور تصور کیا جاتا ہے، سی آئی اے سے بھی بہتر۔

60۔ پاکستان اپنی میزائل ٹیکنالوجی کے لیے بھی جانا جاتا ہے جو کہ دنیا کی بہترین ٹیکنالوجی میں سے ایک ہے۔

61۔ پاکستان دودھ پیدا کرنے والا دنیا کا چوتھا بڑا ملک ہے ۔

62۔ پاکستان دنیا میں آلات جراحی کے سرفہرست پروڈیوسر اور برآمد کنندگان میں سے ایک ہے۔ ایک ذریعے کے مطابق ان آلات میں سے تقریباً 99 فیصد سیالکوٹ میں تیار کیے جاتے ہیں۔

63۔ پاکستان دنیا کا چوتھا سب سے بڑا کپاس پیدا کرنے والا ملک ہے (2017)۔

64۔ پاکستان ایک بہت بڑا اور متنوع آبادی والا ملک ہے۔ پاکستانی معاشرے میں کئی نسلی گروہ ہیں۔ جن میں قابل ذکر درج ذیل ا ہیں:

– شمال: واخی، شناکی، درد، بروشو، اور بلتیز؛

-جنوب: مہاجر اور مکرانی؛

– مشرق: کشمیری، پنجابی، سندھی، اور پوٹھواری۔

– مغرب: پشتون، ہزارہ اور بلوچ۔

65۔ پاکستان کی مشہور پہاڑی چوٹیاں، ان کی کل اونچائی، اور عالمی درجہ بندی۔

مشہور پہاڑی چوٹیوں کی اونچائی اور عالمی درجہ بندی میں نمبر

کے ٹو (چگوری) 8616 میٹر دوسرا

نانگا پربت 8125 میٹر 8 واں

گاشربرم -I 8068 میٹر 11 واں

بروڈ پیک 8065 میٹر 12ویں

گاشربرم-II 8047 میٹر 14 واں

گاشربرم III 7952 میٹر 15 واں

گاشربرم -IV 7925 میٹر 16 واں

دستاغل سر7885 میٹر20 واں

کنیانگ چھیش 7852 میٹر 22 واں

ماشربرم  7821 میٹر 24 واں

راکاپوشی 7788 میٹر 27 واں

بتورا سر I 7785 میٹر 28 واں

کنجت سر 7760 میٹر 29 واں

سالٹورو کانگڑی 7742 میٹر 33 واں

ترِووُر 7720 میٹر 36 واں

تریچ میر 7708 میٹر 41 واں

66۔ دنیا کا پہلا پی سی وائرس دو پاکستانی بھائیوں نے بنایا۔ باسط فاروق علوی اور امجد فاروق علوی نے “دماغ” نامی وائرس تخلیق کیا، جسے 1986 میں دریافت کیا گیا اوراس نے IBM کمپیوٹر پلیٹ فارمز کو نشانہ بنایا۔

67۔ وادی سندھ کی تہذیب، جو دریائے سندھ اور ڈیلٹا کے گرد پھلی پھولی، دنیا کے قدیم ترین معاشروں میں سے ایک ہے جس کی تعمیرات، آثار آج ان کے شہروں اور دنیا کے کئی عجائب گھروں میں محفوظ ہیں۔ قدیم مصری اور میسوپوٹیمیا تہذیب کے ساتھ سندھ کی تہذیب پرانی دنیا کی ابتدائی تین تہذیبیں ہیں جہاں سے سندھ سب سے زیادہ پھیلی ہوئی تھی۔ یہ تہذیب درجنوں منصوبہ بندی سے آباد کیے گئے  شہروں اور قصبوں پر مشتمل ہے جس میں حمام، شہری نکاسی آب اور پانی کی فراہمی کے نظام اور بہت سی بڑی بڑی غیر رہائشی عمارتیں ایک باقائدہ حکومتی نظام کی نشاندہی کرتی ہیں۔

By Trish Mayo from New York, US - P1250552, CC BY 2.0, https://commons.wikimedia.org/w/index.php?curid=6923484
By Trish Mayo from New York, US , CC BY 2.0, Link

67۔دنیا کی کم عمر ترین مائیکروسافٹ سرٹیفائیڈ ماہر ارفع کریم (مرحومہ) جن کا تعلق پاکستان سے ہے۔ بابر اقبال ایک اور قابل فخر پاکستانی ہیں جو اسی کارنامے پر ارفع کے بعد دوسرے نمبر پر ہیں۔

68۔ 1994 میں، پاکستان دنیا کا پہلا ملک بن گیا جس نے ایک ساتھ مختلف مین اسٹریم کھیلوں میں 4 ورلڈ کپ ٹائٹل اپنے نام کیے۔ ان کھیلوں میں کرکٹ، ہاکی، اسکواش اور اسنوکر شامل ہیں۔ پاکستان نے 1992 کا آئی سی سی کرکٹ ورلڈ کپ اور 2009 کا ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ جیتا تھا۔

69۔ پاکستان دنیا کے بہترین جیٹ لڑاکا طیارہ ساز ممالک میں سے ایک قابل فخر ملک ہے۔ جس نے طاقتور JF-17 تھنڈر لڑاکا طیارہ تیار کیا ہے جسے اب ملک برآمد بھی کر رہا ہے۔

69۔ اقوام متحدہ نے پاکستان کو ان 11 ممالک میں شامل کیا جو مستقبل قریب میں دنیا کی اعلیٰ معیشتوں میں شامل ہونے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔

71۔ پاکستان مجموعی زرعی پیداوار کے لحاظ سے 25ویں نمبر پر ہے جس میں چنے سرفہرست ہیں، آم میں 5ویں، کھجور میں 6ویں، چاول میں 8ویں، گندم میں 9ویں اور نارنجی کی پیداوار میں 10ویں نمبر پر ہے۔

72۔ پاکستان براڈ بینڈ انٹرنیٹ کی ترقی کے لحاظ سے دنیا میں چوتھے نمبر پر ہے۔

ماخذات:

دی فیکٹ فائل

یو ایس نیوز

دی کلچر ٹرپ

بگ سیون ٹریول

آسٹریا فورم

آغا جہانگیر بخاری

بانی مدیر و چیف ایگزیکیٹو

Next Post

قوانین پر سختی سے عملدرامد کرایا جائیگا- ڈپٹی کمشنر

جمعرات فروری 17 , 2022
ڈپٹی کمشنر اٹک محمد نعیم سندھو نے کہا ہے کہ لیبر قوا نین ، چا ئلڈ لیبر ، جبری مشقت اور انسدا د انسا نی سمگلنگ پر سختی سے عمل درآمد کرا یا جائے گا
قوانین پر سختی سے عملدرامد کرایا جائیگا- ڈپٹی کمشنر